hafizulhadith - حافظ الحدیث
شیخ الاسلام حافظ القرآن و الحدیث مولانا محمد عبداللہ درخواستی کی پون صدی پر محیط دینی خدمات کو انٹرنیٹ پر پیش کرنے کا ویب پورٹل

ذوق ابوہریرہ رضی اللہ عنہ کے امین

ذوق ابوہریرہ رضی اللہ عنہ کے امین

مولاناعبدالشکور خیرپوری

خطیب جامع مسجد نور، لانڈھی ، کراچی

چودھویں صدی ہجری میں ملت کی جونابغہ روزگار مایہ ناز شخصیتیں پیداہوئیں ، ان میں ایک نمایاں ہستی برکة العصر فخرالمتاخرین حضرت حافظ الحدیث حضرت مولانامحمدعبداللہ درخواستی نوراللہ مرقدہ کی بھی ہے جن کواللہ تعالیٰ نے یہ اعزاز بخشا کہ پون صدی تک آپ نے عقیدہ ختم نبوت اورعظمت صحابہ کے تحفظ اورمملکت خداداد پاکستان کی سا لمیت اوراس کی بقاء کے لئے اپنی زندگی کووقف کئے رکھااوراسی عالم میں اپنے خالق حقیقی سے جاملے ۔ حضرت شیخ درخواستی رحمة اللہ علیہ کاسانحہ ارتحال پندرھویں صدی کاسب سے بڑالمیہ ہے ، اس دن پوراعالم لرز گیاتھاوہ مقام قطبیت پرفائز تھے ، وہ اپنے فیوض سے ایک عالم کوسیراب کرتے رہے ۔ ان کے فیض سے زمانہ مستفیض ہورہاتھا، افسوس کہ یہ علم وحکمت کاچراغ رسول اللہکے علم وعمل کاامین وامام اپنے لاکھوں مستفیدین ہزاروں تلامذہ اورفیوض یافتہ خلفاء وخدام کومہجورومغموم چھوڑکراپنے خالق حقیقی سے جاملے جس کسی نے کہاہے سچ کہاہے :

فَمَاکَانَ قَیْسُ ھَلْکَہ ھَلْکَ وَاحِدٍ

وَلٰکِنَّہ بُنْیِا نُ قَوْمٍ تَھْدِمَا

قیس کامرناصرف ایک آدمی کامرنانہیں بلکہ پوری قوم کی بنیاد کاگرجاناہے ۔

واہ حسرتا!آج دنیااس علم وحکمت کے چراغ سے محروم ہوگئی ہے ۔

 

 

ذوق ابوہریرہ رضی اللہ عنہ کے امین

مولاناعبدالشکور خیرپوری

خطیب جامع مسجد نور، لانڈھی ، کراچی

چودھویں صدی ہجری میں ملت کی جونابغہ روزگار مایہ ناز شخصیتیں پیداہوئیں ، ان میں ایک نمایاں ہستی برکة العصر فخرالمتاخرین حضرت حافظ الحدیث حضرت مولانامحمدعبداللہ درخواستی نوراللہ مرقدہ کی بھی ہے جن کواللہ تعالیٰ نے یہ اعزاز بخشا کہ پون صدی تک آپ نے عقیدہ ختم نبوت اورعظمت صحابہ کے تحفظ اورمملکت خداداد پاکستان کی سا لمیت اوراس کی بقاء کے لئے اپنی زندگی کووقف کئے رکھااوراسی عالم میں اپنے خالق حقیقی سے جاملے ۔ حضرت شیخ درخواستی رحمة اللہ علیہ کاسانحہ ارتحال پندرھویں صدی کاسب سے بڑالمیہ ہے ، اس دن پوراعالم لرز گیاتھاوہ مقام قطبیت پرفائز تھے ، وہ اپنے فیوض سے ایک عالم کوسیراب کرتے رہے ۔ ان کے فیض سے زمانہ مستفیض ہورہاتھا، افسوس کہ یہ علم وحکمت کاچراغ رسول اللہکے علم وعمل کاامین وامام اپنے لاکھوں مستفیدین ہزاروں تلامذہ اورفیوض یافتہ خلفاء وخدام کومہجورومغموم چھوڑکراپنے خالق حقیقی سے جاملے جس کسی نے کہاہے سچ کہاہے :

فَمَاکَانَ قَیْسُ ھَلْکَہ ھَلْکَ وَاحِدٍ

وَلٰکِنَّہ بُنْیِا نُ قَوْمٍ تَھْدِمَا

قیس کامرناصرف ایک آدمی کامرنانہیں بلکہ پوری قوم کی بنیاد کاگرجاناہے ۔

واہ حسرتا!آج دنیااس علم وحکمت کے چراغ سے محروم ہوگئی ہے ۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.